=== A ring to me is bondage – by Mina Asadi === ==…

=== A ring to me is bondage – by Mina Asadi ===
=== میرے نزدیک انگوٹھی اسیری کی نشانی ہے -شاعرہ: مینا اسدی ===
اردو ترجمہ : ناہیدؔ ورک
*********************

میں جائے نماز کے بارے میں نہیں سوچتی،
مجھے جائے نماز سے فرق نہیں پڑتا،
ہاں مگر اُن سینکڑوں شاہراہوں کے متعلق ضرور سوچتی ہوں
جو ریشمیں پھولوں کے گوشوں والے درختوں سے بھرے
سینکڑوں باغات میں سے ہو کر گزرتی ہیں؛
مجھے کعبے کا رُخ معلوم ہے؛
یہ اُسی طرف ہے جس طرف خوشی کا چہرہ ہے؛
اور میں ان ریشمیں شاہراہوں پر
پرندوں کی چہکار کے ہمراہ
اپنی نماز ادا کرتی ہوں۔

میں نہیں جانتی اُنسیت کا مطلب کیا ہے،
یا پھر دو مختلف ملکوں میں رہنے سے کیا فرق پڑتا ہے۔
میرے نزدیک تو اکیلا پن ہی خوشی ہے
اور ریگستان میرے لیے گھر جیسا ہے،
اور جو کچھ مجھے اداسی میں مبتلا کر دے
وہ محبت ہے۔

میرے لیے پانچ پاؤنڈ کے نوٹ کا مطلب دولت ہے؛
میں شاخ سے پھول کو جدا کرنے والے ہر شخص کو
اندھا شمار کرتی ہوں؛
اور میرے نزدیک
وہ جال کسی قاتل سے کم نہیں
جو مچھلی کو پانی سے جدا کرتا ہے۔
مچھلی کو پانی سے جدا کر دینے والا جال
ایک قاتل کی حیثیت رکھتا ہے۔

میں سمُندر کی وسعت کو رشک بھری نظروں سے دیکھتی ہوں
اور خود سے کہتی ہوں:
"تمہارا دامن کس قدر چھوٹا ہے!”
شاید سمُندر میں مدغم ہونے کے بعد
دریا کو بھی ایسا ہی محسوس ہوتا ہو!

میں نہیں جانتی رات کا مطلب کیا ہے،
مگر دن کے تاثرات خوب سمجھتی ہوں۔
میرے نزدیک پھولوں کی ایک جھاڑی
ایک گاؤں کے برابر ہے
اور یادوں کے باغات میں کچھ دیر کی چہل قدمی
بھر پور آزادی کا تصوۤر ہے،
اور یوں ہی بے مقصد سی مسکراہٹ،
بھر پورخوشی کا نام ہے۔
میرے نزدیک ہر وہ شخص جیلر ہے
جس کے قبضے میں کوئی ایک بھی پنجرہ ہے؛

اور مجھے ہر وہ سوچ
ایک بے جان دیوار کی مانند محسوس ہوتی ہے،
جو میرے دل میں بیکار رکھی ہوئی ہے؛
میرے نزدیک انگوٹھی اسیری کی نشانی ہے۔

مجھے جائے نماز سے فرق نہیں پڑتا،
ہاں مگر اُن سینکڑوں شاہراہوں کے متعلق ضرور سوچتی ہوں
جو ریشمیں پھولوں کے گوشوں والے درختوں سے بھرے
سینکڑوں باغات میں سے ہو کر گزرتی ہیں؛


بشکریہ

=== A ring to me is bondage – by Mina Asadi ====== میرے نزدیک انگوٹھی اسیری کی نشانی ہے -شاعرہ: مینا اسدی ===اردو تر…

Posted by Yasir Habib on Sunday, December 31, 2017

جواب چھوڑیں