عطا شاد پارساؤں نے بڑے ظرف کا اظہار کیا ہمیں سے …

عطا شاد

پارساؤں نے بڑے ظرف کا اظہار کیا
ہمیں سے پی اور ہمیں رسوا سرِ بازار کیا

رات پھولوں کی نمائش میں وہ خوش جسم سے لوگ
آپ تو خواب ہوئے اور ہمیں بیدار کیا

درد کی دھوپ میں صحرا کی طرح ساتھ رہے
شام آئی تو لپٹ کر ہمیں دیوار کیا

کچھ وہ آنکھوں کو لگے سنگ پہ سبزے کی طرح
کچھ سرابوں نے ہمیں تشنۂ دیدار کیا

سنگساری میں تو وہ ہاتھ بھی اٹھا تھا عطا
جس نے معصوم کہا جس نے گنہ گار کیا


Leave your vote

1 point
Upvote Downvote

Total votes: 1

Upvotes: 1

Upvotes percentage: 100.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

شئیر کریں

جواب چھوڑیں

Hey there!

Forgot password?

Don't have an account? Register

Forgot your password?

Enter your account data and we will send you a link to reset your password.

Your password reset link appears to be invalid or expired.

Close
of

Processing files…