#ریویو کتاب :#خودکشی The Myths Of Sisyphus مصن…

#ریویو

کتاب :#خودکشی The Myths Of Sisyphus
مصنف: البرٹ کامیو
فارمیٹ :پی ڈی ایف
ترجمہ: ارشاد احمد مغل
اشاعت :2013
ناشر:بک ہوم لاہور

کسی بھی مذہب میں خودکشی کے عمل کو جائز قرار نہیں دیا جاتا ،لیکن کبھی کبھی انسان کچھ نفسیاتی بیماریوں یا مساہل کے سامنے بے بس ہوجاتا ہے ہار جاتا ہے تو وہ اس راستے کو اختیار کر لیتا ہے ،لیکن خودکشی کسی مسلے کا حل نہیں دنیا میں ایسا کوئی مسلہ ہی نہیں جس کا حل نہ ہو بس انسان کو کوشش کرتے رہنا چاہئے اللہ زندگی اسی کو ہی عطا کرتا جس کو جینے کی خواہش ہو ،،

دنیا میں دو ایسے مشہور مقام ہیں جن میں ایک
سان فرانسسکو میں گولڈن گیٹ بریج ہے اور دوسری جاپان میں اوکی گہارا جنگل (Aokigahara)ہے ایک سروے کے مطابق 2005 میں گولڈن گیٹ بریج پر سے تقریبا 1200 لوگوں نے جمپ لگایا تھا جب کہ اوکی گہارا جنگل سے 2002 میں تقریبا 72 لاشیں ملی تھیں ،ان جہگوں پر خودکشی کے واقعات اتنے زیادہ ہوتے ہیں کہ جگہ جگہ پر خودکشی کے لیے سوچنے والوں کے لیے امدادی اداروں کے نشانات پیوست ہیں ۔۔

یہ کتاب البرٹ کامیو کی متھ آف سسی فس
(سی سی فس کا افسانہ) کا اردو ترجمہ ہے اور
ارشاد احمد مغل صاحب نے اس کا اردو ترجمہ #خودکشی کے نام کیا ہے اس کتاب میں اسی موضوع کا کھوج لگانے کی کوشش کی گئی ہے کہ انسان کو زندہ رہنا چاہئے یا خودکشی کرنی چاہئے ؟آپ اسے انسان کی کہانی بھی کہہ سکتے ہیں

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے مطابق ہر 40 سیکنڈ کے بعد ایک شخص دنیا میں خودکشی کرتا ہے ،اس کے علاوہ تقریبا دو کروڑ کے قریب لوگ ہر سال خودکشی کی کوشش کرتے ہیں اسی وجہ سے خودکشی دنیا کا ایک بہت بڑا مسلہ بن کر سامنے اہا رہا ہے ۔جدید نقطہ نظر کے مطابق خودکشی کی سب سے بڑی وجہ ذہنی بیماری ہے جو بہت ایسے نفسیاتی عوامل کے ساتھ جڑی ہوئی ہے جس کے ذریعے ایک انسان اپنے ڈپریشن،خوف،دکھ یاذہنی پریشانی پر قابو پانے کا اہل نہیں ہوتا ۔
اس کتاب میں آگے البرٹ کامیو لکتھے ہیں فضول استدلال ،
فضولیت اور خودکشی ،فضول بندشیں،
فلسفیانہ خودکشی،فلسفہ اور فکشن،عارضی تخلیق،
امید اور بے سروپائی کے متلعق ان سب کی مزید تفصیل جاننے کے لیے آپ کو البرٹ کامیو کی کتاب
#خودکشی (the Myth of Sisyphus ) پڑھنی ہوگی ،،

#ش_م_س



بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/2788424088054773

جواب چھوڑیں