( غیــر مطبـوعـہ ) مَــوت مَوت جیبوں میں ہے م…

( غیــر مطبـوعـہ )

مَــوت

مَوت جیبوں میں ہے
موت گلیوں میں ،
سڑکوں پہ،
چوراہوں پر
موت اونچے مکانوں کی
شہ سرخیوں
روغنی چمنیوں،
ادھ کھلی کھڑکیوں
جھونپڑوں،
بستیوں
،ٹوٹے پھوٹے گھروں
موت فٹ پاتھ پر
موت بینچوں کے نیچے
ہری وادیوں
موت بازار میں
موت اخبار میں
موت دریا،سمندر
،کنویں ،جھیل،تالاب
جوہڑ،گڑھے،گٹر کی نالیوں
موت تنہااکیلی
بھیڑ میں،
شور میں،
سوگ میں ،
تالیوں میں
موت پنکھے سے الٹی لٹکتی ہوئی
موت شاخوں سے پتے اچکتی ہوئی
ریل کی پٹریوں
آگ کی تیلیوں
فیکٹری کے دھویں سے
سیہ کالے رستوں پہ بھٹکی ہوئی
آنکھ کی بالکونی پہ اٹکی ہوئی
موت چٹخی ہوئی
موت اک فاحشہ کی طرح
گاہکوں کے تعاقب میں
جھانجھر بجاتی
ہوئی گیت گاتی ہوئی

( سِــدرہ سَــحَــر ؔ عمــران )

جواب چھوڑیں