ہَیرمان ہَیسے، خاتون اور نظمجو کچھ بھی نفسانی ہے، …

ہَیرمان ہَیسے، خاتون اور نظم
جو کچھ بھی نفسانی ہے، وہ روحانی سے زیادہ قدر کا حامل نہیں ہوتا، بال برابر بھی نہیں۔ اسی طرح روحانی کی قدر بھی نفسانی سے زیادہ نہیں ہوتی۔ کسی خاتون کو گلے لگا لو یا کوئی نظم لکھ لو، بات ایک ہی ہے۔
(’ہَیرمان ہَیسے: مشاہدات‘ سے ایک اقتباس، جرمن سے اردو ترجمہ: مقبول ملک)
Das Sinnliche ist um kein Haar mehr wert als der Geist, so wenig wie umgekehrt. Ob du ein Weib umarmst oder ein Gedicht machst, ist dasselbe. (Aus Hermann Hesse: Betrachtungen und Berichte)


بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/2813892928841222

جواب چھوڑیں