روپم مشر کی ایک الگ انداز کی ہندی نظم مترجم: آفتاب…

روپم مشر کی ایک الگ انداز کی ہندی نظم
مترجم: آفتاب احمد، کولمبیا یونیورسٹی، نیو یارک
                    ***
مُنھ پر ڈھیر سارا خون پوت کر
وہ جب ہاتھ اُٹھائے
فتح کا نعرہ بلند کرتا ہوا کھڑا ہُوا
تو ہمیں لگا کیسریہ گُلال پوتے یہ عظیم انسان کھڑا ہے!
ہم نے تالی پیٹ کر کہا یہ ہمارے مذہب کا مُحافظ ہے
یہ بس مذہب کے دُشمنوں کا خون پئے گا!
وہ مَن ہی مَن ہنسا
اب تو خون میرے مُنھ کو لگ گیا حرام خورو!
میں کیسے پہچانوں تمھارے خون کا رنگ

بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/2832602313636950

جواب چھوڑیں