نظم : پھول کی پتیاں بکھر گئیں۔۔!! گلاب کی پتیاں ب…

نظم : پھول کی پتیاں بکھر گئیں۔۔!!

گلاب کی پتیاں بکھر جاتی ہیں
آج میں اس سے رخصت ہوا جس سے میں محبت کرتا ہوں
الوداع ! میری پیاری
الوداع ! میری پیاری سی اپنی ننھی سی فاختہ
جھکا جھکا چاند زعفرانی چاندنی لئے چمکتا ہے
میرا چہرہ بھی زرد ہے، اور اس کا بھی
الوداع ! میری پیاری
الوداع ! میری پیاری سی اپنی ننھی سی فاختہ
سوکھی ٹہنیوں پر شبنم گرتی ہے
ہمارے رخساروں پر پھر سے آنسو بہتے ہیں
الوداع ! میری پیاری
الوداع ! میری پیاری سی اپنی ننھی سی فاختہ
ایک دن گلاب پھر کھلے گا
ایک دن ہم دونوں ملیں گئے۔۔ کون جانے
الوداع ! میری پیاری
الوداع ! میری پیاری سی اپنی ننھی سی فاختہ

•••••
شاعر : سیندور پٹوفی
مترجم : خالد اقبال یاسر
حوالہ : تسطیر
انتخاب و ٹائپنگ : احمد بلال


بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/2876351095928738

جواب چھوڑیں