"میں نے کبھی چیزوں کو ایسے نہیں لکھا جیسے وہ …

"میں نے کبھی چیزوں کو ایسے نہیں لکھا جیسے وہ واقع ہوئی ہوں۔ میری تمام تحریریں بلاشبہ میرے ذاتی تجربات ہی کے مختلف ابواب ہیں، لیکن اس کے باوجود بھی وہ "میری زندگی کی کہانی" ہرگز نہیں۔ جو کچھ میرے ساتھ میری زندگی میں ہوا، وہ تو ہوچکا، اس کی صورت پذیری ہوچکی اور وقت نے اس سب کچھ کو گوندھ کر ایک شکل دے دی ہے۔ واقعہ جیسے ہوا اسے من و عن تحریر کر دینے کا مطلب ہے خود کو یادداشت کا اسیر بنا دینا، اور یادداشت تو تخلیقی عمل کا ایک چھوٹا سا عُنصر ہے۔ میرے خیال میں تخلیق کا مطلب ہے لفظوں اور واقعات کی رفتار کو ایک ایسے نظام کی شکل دینا، ان کی ایسی کھوج لگانا اور ان کا ایسا انتخاب کرنا کہ وہ کسی مخصوص تحریر کے لیے موافق ہو جائیں۔ اس کے لیے خام مواد بلاشبہ آپ کی اپنی زندگی سے آتا ہے لیکن ایک تخلیق بالآخر ایک آزاد تخلیق ہی ہوتی ہے"
ایہرن ایپل فیلڈ سے گفتگو
فلپ روتھ: ترجمہ۔ سید کاشف رضا
دنیا زاد۔ کتابی سلسلہ 38
ترتیب: آصف فرخی۔


بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/2940452742851906

جواب چھوڑیں