ہائنے، غالب اور تصورِ جاناں میں بیٹھا ہوں، احساس …

ہائنے، غالب اور تصورِ جاناں

میں بیٹھا ہوں، احساس ہے اِک اور خواب میں ہوں
اُسی کی سوچ ہے بس جو میرا محبوب ہے

(ہائنرش ہائنے کی ایک نظم سے؛ جرمن سے اردو ترجمہ: مقبول ملک)

جی ڈھونڈتا ہے پھر وہی فرصت کہ رات دن
بیٹھے رہیں تصور جاناں کیے ہوئے
(غالب)

Ich sitze und sinne und träume,
Und denk an die Liebste mein.

(Heinrich Heine)

Image may contain: 1 person, closeupImage may contain: 1 person
بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/2947345832162597

جواب چھوڑیں