ہرلَحظَہ ہے مومِن کی نئی شان نئی آن گُفتار میں کِ…

ہرلَحظَہ ہے مومِن کی نئی شان نئی آن
گُفتار میں کِردار میں اللہ کی بُرہان

قہاری و غَفّاری و قُدُّوسی و جَبرُوت
یہ چار عناصِر ہوں تَو بَنتا ہے مُسَلمان

ہَمسایۂ جِبریلِ اَمیں بَندۂ خاکی
ہے اِس کا نَشیمن نہ بُخارا نہ بَدَخشان

یہ راز کِسی کو نہیں مَعلُوم کہ مومِن…

More

جواب چھوڑیں