عجیب وحشتیں حصے میں اپنے آئی ہیں کہ تیرے گھر بھی …

عجیب وحشتیں حصے میں اپنے آئی ہیں
کہ تیرے گھر بھی پہنچ کر سکوں نہ پائیں ہم
……
کیوں ہمارے سانس بھی ہوتے ہیں لوگوں پر گراں
ہم بھی تو اک عمر لے کر اس جہاں میں آئے تھے
……
تو میسر تھا تو دل میں تھے ہزاروں ارماں
تو نہیں ہے تو ہر اک سمت عجب رنگ ملال
…….
وہ میری راہ میں کانٹے بچھائے میں لیکن…

More

May be an image of 4 people and people standing

جواب چھوڑیں