خیال من بہ تماشای آسمان بود است بدوش ماہ و بہ آغو…

خیال من بہ تماشای آسمان بود است
بدوش ماہ و بہ آغوش کہکشان بود است
گمان مبر کہ ہمین خاکدان نشیمن ماست
کہ ہر ستارہ جہان است یا جہان بود است
Urdu👇🏻
میرا تخیّل آسمانوں کے نظارے کرتا ہے، (کبھی) چاند کے کندھے پر (سوار) اور (کبھی) کہکشاں کی گود میں ہوتا ہے۔
آیسا مت سوچ کہ یہی زمین ہمارا نشیمن ہے، ہر ستارہ… More


بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/3061915410705638

جواب چھوڑیں