"ابھی میں وضو کر ہی رہا تھا کہ سامنے دو نازک اندام…

"ابھی میں وضو کر ہی رہا تھا کہ سامنے دو نازک اندام لڑکیاں لہک لہک کر میری جانب آتی دکھائی دیں۔ انھیں شاہد پانی کی ضرورت تھی یا کچھ اور۔ وہ باتوں میں اس قدر محو تھیں کہ انھیں راستے کا اندازہ ہی نہ ہو سکا اور یکایک ان کے پاوں کیچڑ میں جادھنسے جو اس ٹونٹی کی "فیاضی” کے باعث پھیلا ہوا تھا۔ ان کے جوتے ، جرابوں تک کیچڑ میں دھنس گئے۔ یہ صورتِ حال دیکھ مجھے بہت افسوس ہوا اور میں جلدی سے وضو چھوڑ کر اٹھ کھڑا ہوا تاکہ وہ اپنے پاوں اور جرابیں دھو سکیں۔ وہ گبھرا کر کیچڑ سے نکلیں اور اپنے پاوں دھونے لگیں۔…

More

بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/3076743185889527

جواب چھوڑیں