ہَم کُوۓ مَلامَت سے گُزر آۓ ہیں یارو اَب چاک رہا …

ہَم کُوۓ مَلامَت سے گُزر آۓ ہیں یارو
اَب چاک رہا ہے، نہ گِریبان رہا ہے۔۔۔!

سیف الدین سیفؔ

جواب چھوڑیں