ڈیلی آرکائیو

2019-02-13

سید محمد طالب رہائش حیدر آباد دکن انڈیا پیدائش 14…

سید محمد طالب رہائش حیدر آباد دکن انڈیا پیدائش 14 فروری 1938 وفات 16 جنوری 2011 کتاب کا نام ۔ سخن کے پردے میں اعتراف ابلیس تو نے جس وقت یہ انسان بنایا یا رب اس گھڑی مجھ کو تو ایک آنکھ نہ بھایا یا رب اس لیے میں نے ، سر اپنا نہ جھکایا یا…

گلوں میں رنگ بھرے، بادِ نو بہار چلے – فیض احمد فیض…

گلوں میں رنگ بھرے، بادِ نو بہار چلے - فیض احمد فیض گلوں میں رنگ بھرے، بادِ نو بہار چلے چلے بھی آؤ کہ گلشن کا کاروبار چلے قفس اداس ہے یارو، صبا سے کچھ تو کہو کہیں تو بہرِ خدا آج ذکرِ یار چلے کبھی تو صبح ترے کنجِ لب سے ہو آغاز کبھی تو شب…

فیض نے یہ نظم ١٩٧٤ء میں ڈھاکہ سے واپسی پر لکھی ھم…

فیض نے یہ نظم ١٩٧٤ء میں ڈھاکہ سے واپسی پر لکھی ھم کہ ٹھہرے اجنبی اتنی مداراتوں کے بعد پھر بنیں گے آشنا کتنی ملاقاتوں کے بعد ؟؟ کب نظر میں آئے گی بے داغ سبزے کی بہار؟؟ خون کے دھبے دھلیں گے کتنی برساتوں کے بعد ؟؟ تھے بہت بے درد لمحے ،…

فیض کے چاھنے والوں کی کمی نہیں لاکھوں نہیں کروڑوں …

فیض کے چاھنے والوں کی کمی نہیں لاکھوں نہیں کروڑوں ھیں۔ ایک یُوسف ابراھیم بھی ھیں۔ آئیں اُن سے فیض کی ایک خُوبصورت نظم سنیں۔ ”آج اِک حرف کو ، پھر ڈھونڈتا پھرتا ھے خیال“ آج اِک حرف کو ، پھر ڈھونڈتا پھرتا ھے خیال مدھ بھرا حرف کوئی ، زھر…

ڈاکٹر معین احن جذبیؔ مرنے کی دعائیں کیوں مانگوں ج…

ڈاکٹر معین احن جذبیؔ مرنے کی دعائیں کیوں مانگوں جینے کی تمنا کون کرے یہ دنیا ہو یا وہ دنیا اب خواہش دنیا کون کرے جب کشتی ثابت وسالم تھی، ساحل کی تمنا کس کو تھی اب ایسی شکستہ کشتی پر ساحل کی تمنا کون کرے جو آگ لگائی تھی تم نے اس کو تو…

فیض کے چاھنے والوں کی فہرست بہت طویل ھے اور زھرہ ن…

فیض کے چاھنے والوں کی فہرست بہت طویل ھے اور زھرہ نگاہ سرِ فہرست ھیں۔ آئیں ایک خوبصورت نظم فیض صاحب سے اور زھرہ نگاہ کی خُوبصورت آواز میں ترنُم میں سنیں۔ ”کیا کریں“ میری تیری نگاہ میں جو لاکھ انتظار ھیں جو میرے تیرے تن بدن میں لاکھ دِل…

سینے میں جلن آنکھوں میں طوفان سا کیوں ہے اس شہر می…

سینے میں جلن آنکھوں میں طوفان سا کیوں ہے اس شہر میں ہر شخص پریشان سا کیوں ہے دل ہے تو دھڑکنے کا بہانہ کوئی ڈھونڈے پتھر کی طرح بے حس و بے جان سا کیوں ہے کیا کوئی نئی بات نظر آئی ہے ہم میں آئینہ ہمیں دیکھ کے حیران سا کیوں ہے تنہائی کی یہ…

یہ تیرے حُسن سے لپٹی ھُوئی , آلام کی گرد اپنی دو ر…

یہ تیرے حُسن سے لپٹی ھُوئی , آلام کی گرد اپنی دو روزہ جوانی کی شِکستوں کا شمار چاندنی راتوں کا ، بے کار دھکتا ھُوا درد دل کی بے سُود تڑپ ، جسم کی مایُوس پکار چند روز اور میری جان ! فقط چند ھی روز ”فیض احمّد فیض“ بشکریہ…

Hey there!

Forgot password?

Don't have an account? Register

Forgot your password?

Enter your account data and we will send you a link to reset your password.

Your password reset link appears to be invalid or expired.

Close
of

Processing files…