ڈیلی آرکائیو

2019-08-22

گلاب شاعری ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ نازکی اس کے لب کی کیا کہیۓ …

گلاب شاعری ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ نازکی اس کے لب کی کیا کہیۓ پنکھڑی ایک گلاب کی سی ہے میر تقی میر ..... مرزا مظہر جانِ جاناں عالم ہے یہ پسینے کا اس مستِ خواب پر پڑی ہے اوس جیسے سحر کو گلاب پر ..... میاں مصحفی سرخ ہے مے سے وہ چشمِ نیم خوابِ نرگسی…

مجھ سے ملنے شبِ غم اور تو کون آئے گا میرا سایہ …

مجھ سے ملنے شبِ غم اور تو کون آئے گا میرا سایہ ہے جو دیوار پہ جم جائے گا ٹھہرو ٹھہرو ، مرے اصنامِ خیالی ، ٹھہرو میرا دل گوشۂِ تنہائی میں گھبرائے گا لوگ دیتے رہے کیا کیا نہ دِلاسے مجھ کو زخم گہرا ہی سہی، زخم…

محاصرہ احمد فراز مرے غنیم نے مجھ کو پیام بھیجا ہے…

محاصرہ احمد فراز مرے غنیم نے مجھ کو پیام بھیجا ہے کہ حلقہ زن ہیں مرے گرد لشکری اس کے فصیل شہر کے ہر برج ہر منارے پر کماں بہ دست ستادہ ہیں عسکری اس کے وہ برق لہر بجھا دی گئی ہے جس کی تپش وجود خاک میں آتش فشاں جگاتی تھی بچھا دیا گیا…

صفیؔ لکھنوی زندہ ہیں اگر زندہ دنیا کو ہلا دیں گے م…

صفیؔ لکھنوی زندہ ہیں اگر زندہ دنیا کو ہلا دیں گے مشرق کا سرا لے کر مغرب سے ملا دیں گے اسلام کی فطرت میں قدرت نے لچک دی ہے اتنا ہی یہ ابھرے گا جتنا کہ دبا دیں گے اے جذبۂ اسلامی جس دل میں نہ تو ہو گا یہ نظمِ صفیؔ پڑھ کر ہم اس کو سنادیں گے…

اس دورِ بے جنوں کی کہانی کوئی لکھو جسموں کو برف، خ…

اس دورِ بے جنوں کی کہانی کوئی لکھو جسموں کو برف، خون کو پانی کوئی لکھو کوئی کہو کہ ہاتھ قلم کس طرح ہوئے کیوں رک گئی قلم کی روانی کوئی لکھو کیوں اہلِ شوق سر بگریباں ہیں دوستو کیوں خوں بہ دل ہے عہدِ جوانی کوئی لکھو کیوں سرمہ در گلو ہے ہر اک…