ڈیلی آرکائیو

2020-04-25

( غیــر مطبــوعـہ ) ناتــوانی بھـــــی نہیـں مـــ…

( غیــر مطبــوعـہ ) ناتــوانی بھـــــی نہیـں مـــانـعِ طُــغــیــانیِ شوق عَجـــز کے سـائے ذرا دیکھیے سـلطـانیِ شوق اے جمــــــالِ نظــــــر انداز ! اے بولانیِ شوق ! مجھ سے دیکھی نہیں جـاتی تِری اَرزانیِ شوق پیــــچ دَر پیــــچ…

کہہ دے من کی بات تو گوری کاہے کو شرماتی ہے شام ڈھ…

کہہ دے من کی بات تو گوری کاہے کو شرماتی ہے شام ڈھلے تجھ کو کس اپرادھی کی یاد ستاتی ہے تجھ کو مجھ سے پریم ہے تو بے کل ہے میری چاہت میں تیری پایلیا کی جھن جھن سارے بھید بتاتی ہے کھول کے گھونگھٹ کے پٹ پیار سے کرتی ہے پرنام مجھے بھور…

کرونا وائرس سے کیا سیکھا؟ ء Messages from Corona…

کرونا وائرس سے کیا سیکھا؟ 😯🐧🐠🌹💉 ء Messages from Corona Pandemic حوالہ Digital Phablet | مترجم #مُسافرشب ★ ضرورت سے زیادہ دوست یار اتنے ضروری نہیں جتنا لگتا ہے۔ آپ اپنے دوست خود بھی ہو سکتے ہیں۔ ★ تنہائی اور خاموشی نقصان دہ نہیں۔ ★ جن…

اُداسیوں کا یہ موسم بدل بھی سکتا تھا وہ چاہتا ، تو مِرے ساتھ چل بھی سکتا تھا و…

اُداسیوں کا یہ موسم بدل بھی سکتا تھا وہ چاہتا ، تو مِرے ساتھ چل بھی سکتا تھا وہ شخص! تُو نے جسے چھوڑنے میں جلدی کی تِرے مزاج کے سانچے میں ڈھل بھی سکتا تھا وہ جلدباز! خفا ہو کے چل دِیا، ورنہ تنازعات کا کچھ حل نکل بھی سکتا تھا اَنا نے ہاتھ…

گناہ گار . بات کرنے کی کب ملی مہلت حال اک دو…

گناہ گار . بات کرنے کی کب ملی مہلت حال اک دوسرے کا کب پوچھا چاندنی رات کے دریچے میں اس نے یہ ہاتھ، ہاتھ میں نہ لیا بارشوں میں کبھی نہ بھیگے ساتھ دھوپ میں ڈھونڈ پائے کب سایا اس نے باندھا نہیں کوئی پیماں میں نے مانگا نہیں کوئی…

سرکاری ملازمین کورونا وائرس کا سبب بننے لگے پاکستا…

سرکاری ملازمین کورونا وائرس کا سبب بننے لگے پاکستان بھر میں دفعہ 144کے باوجود ٹینڈرز کی آڑ میں کورونا وائرس پھیلانے کی سازش پوری دنیا میں کورونا وائرس کی وجہ سے لاک ڈاؤن لیکن پاکستان کے مختلف محکموں کے مفاد پرست افسروں نے کرونا وائرس کے…

( غیـر مطبـوعـہ ) بِن محافظ ۔ ۔ کُھلے ریل کے ای…

( غیـر مطبـوعـہ ) بِن محافظ ۔ ۔ کُھلے ریل کے ایک پھاٹک سی ہے زندگی جس کے دونوں طرف خواب میں جاگتی بھیڑ سی ہے رواں جس کو یہ سوچتے کی بھی فرصت نہیں کس کو جانا ہے کب ' کس طرف اور کہاں اور لگی تھی یہاں جس محافظ نما شخص کی نوکری وہ بھی…

سوال دل کا شامِ غم کو اور اداس کر گیا ترے وجود می…

سوال دل کا شامِ غم کو اور اداس کر گیا ترے وجود میں جو ایک میں تھا وہ کدھر گیا طلسمِ شوق فکرِ زندہ اور کربِ آگہی تمام عمر کا سفر نگاہ سے گزر گیا چلے تو حوصلہ جواں تھا موجِ گل تھی آرزو جدھر بھی آنکھ اٹھ گئی سماں نکھر نکھر گیا…