ڈیلی آرکائیو

2020-05-08

تری یاد جو میرے دل میں ہے بس اسی کی جلوہ گری رہی …

تری یاد جو میرے دل میں ہے بس اسی کی جلوہ گری رہی مرا غم بھی تازہ بہ تازہ ہے مری شاخ فن بھی ہری رہی میں نے اپنے پردۂ شعر میں تجھے اس ہنر سے چھپا لیا کہ غزل کہی تو ہر اک غزل تری خوشبوؤں سے بھری رہی یہی زندگی مری زندگی یہی زندگی مری موت ہے…

پہلے غیر یورپی نوبیل انعام یافتہ بنگالی ادیب رابند…

پہلے غیر یورپی نوبیل انعام یافتہ بنگالی ادیب رابندرناتھ ٹیگور کا آج 159واں یوم پیدائش ہے۔ ڈبلیو بی ییٹس (W. B. Yeats) نے رابندرناتھ ٹیگور کی تحاریر کے متعلق کہا تھا: "اگر کوئی یہ کہے کہ وہ اس تحریر کے ٹکڑے کو بہتر بنا سکتا ہے تو وہ شخص…

جھکی جھکی سی نظر بے قرار ہے کہ نہیں کیفی اعظمی ج…

جھکی جھکی سی نظر بے قرار ہے کہ نہیں کیفی اعظمی جھکی جھکی سی نظر بے قرار ہے کہ نہیں دبا دبا سا سہی دل میں پیار ہے کہ نہیں تو اپنے دل کی جواں دھڑکنوں کو گن کے بتا مری طرح ترا دل بے قرار ہے کہ نہیں وہ پل کہ جس میں محبت جوان ہوتی ہے اس…

انسانی ارتقا کے راز۔ مذہب ’ فلسفے اور سائنس کے آئینوں میں۔۔۔۔۔ڈاکٹر خالد سہیل/قسط1

انتسابدانائی کی تلاش میںاپنے ہمسفرڈاکٹر بلند اقبال کے نام ؎ اپنی پہچان کرنے نکلا تھاایک عالم سے روشناس ہواعارفؔ عبدالمتین ؎ فیض تھی راہ سر بسر منزلہم جہاں پہنچے کامیاب آئےفیضؔ احمد فیض ؎ منزلیں دور بھی ہیں منزلیں نزدیک بھی ہیںاپنے…

تصوف اور روحانی علاج – گل رحمان ہمدرد

تصوف کے تین نمایاں شعبے ہیں۔١۔ طریقت٢۔ عرفان٣۔ روحانی علاجان میں سے طریقت اصل میں ایمانیات و اخلاقیات سے عبارت ہے۔ یہ تصوف کا وہ حصہ ہے جو براہِ راست تنزیلاتِ ربانیہ سے ماخوذ ہے۔ عرفان کسی صوفی کے ذاتی نفسی تجربات و ادراکات کا نام ہے جو…

تھک چکی ہوں – سعدیہ صفدر سعدی زندگی میری جبیں پر …

تھک چکی ہوں – سعدیہ صفدر سعدی زندگی میری جبیں پر ہاتھ رکھ کر دیکھ تجھ کو غم کدوں کی آگ میں جلنا پڑے کچھ تیرے ماتھے پر تپش سے داغ ابھریں حسن تیرا بھی مرے کندن سراپے کی طرح مٹی بنے یا خاک چاٹے زندگی تجھ کو قسم ہے میری دکھتی زرد…

’’کوئے ملامت کا رخ کرنے کو مچلتا ہمارا دل‘‘ ۔۔نصرت جاوید

کرونا کے خوف نے جو تنہائی مسلط کررکھی ہے اس سے نبردآزما ہونے کے لئے مختلف ہتھکنڈے استعمال کرتا رہتا ہوں۔معاملہ اگرچہ ’’کوئی صورت نظر نہیں آتی‘‘ والا ہوچکا ہے۔ابھی تک ایک حربہ مگر وقت گزارنے میں کافی مددگار ثابت ہورہا ہے۔اپنے ذہن…

میری ڈائری کا بوجھ۔۔روبینہ فیصل

تمہاری سفری گٹھریوں کا سارا بوجھآنے کے سب رنگین پتوں میں ڈھکے مناظراور جاتے ہوئے موسم کے سب بے رنگ نصابصفحہ صفحہ یاد ہیں۔۔۔ صفحہ صفحہ اس ڈائری میں قید ہیںبدلی محبت کے چہرے سے رِستےخون کے سب قطرے ہیں کہ اس…

( غیر مطبوعہ ) لا مکانی کے ان دائروں میں کہیــں …

( غیر مطبوعہ ) لا مکانی کے ان دائروں میں کہیــں نخــــل امـکان ہے رست خیــــــزی* کے کرتب دکھاتا ہوا کوئی دہقان ہے کِشتِ خِلقت کی مٹّی نجانے نمو گیر کیسے ہوئی پھول کیسے کھلا ، سوچنے کے لیے صرف انسان ہے چرخ کی نیل گوں…