ڈیلی آرکائیو

2020-07-05

حیات موش (اُردو) از آندرے زینیوسکی پولش زبان کا…

حیات موش (اُردو) از آندرے زینیوسکی پولش زبان کا یہ ناول کمال فن ہے۔ ایک چوہے کی آپ بیتی پڑھیے اور سر دھنیے۔ ایک عام سے چوہے کی عامیانہ سی زندگی میں ہماری کیا ہی دلچسپی ہو سکتی ہے۔ لیکن ایک دفعہ ناول شروع کرنے کے بعد اسے چھوڑنا مشکل ہو گا۔…

فتنہ و انتشار کی ممکنہ دوسری لہر

اکرام سہگلکراچی میں فتنہ و انتشار کی چاپ ایک بارپھر سنائی دے رہی ہے۔ پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر چار مسلح دہشت گردوں کے حملے میں ایک پولیس افسر اور تین گارڈز کی شہادت ہوئی۔ پولیس اور قانون نافذ کرنےوالے اداروںکی بروقت کارروائی

ہندی نظم: باپ بن جاتے ہیں وہ بوڑھے بھائی!شاعرہ: رو…

ہندی نظم: باپ بن جاتے ہیں وہ بوڑھے بھائی!شاعرہ: روپم مشرمترجم: آفتاب احمد، کولمبیا یونیورسٹی ***باپ بن جاتے ہیں وہ بوڑھے بھائی!جب چھوٹی بہن کبھی میکے آتی ہے!وہ دیکھتے پیار اور دُلار سے اپنی اِس ننھی سی چڑیا کو بار بارجو…

سرمایہ دارانہ تصورِ ترقی اور مابعدِ نوآبادیاتی معا شرے – طلحہ افتخار

یہ مقالہ سرمایہ دارانہ تصورِ ترقی، جس کو دنیا بالعموم اور مابعدِنو آبادیاتی معاشروں میں بالخصوص من و عن تسلیم کرلیا گیا ہے، کا ایک تنقیدی جائزہ پیش کرے گا۔ سرمایہ داری صرف ایک معاشی نطام نہیں بلکہ ایک ایسا نطامِ حیات ہے جو کہ باقی تمام…

اسلام آباد میں مندر کی تعمیر کا مسئلہ

پیارے پڑھنے والے کچھ دنوں سے یہ خبر گرم ہے کہ حکومت مندر کی تعمیر کیلئے اسلام آباد میں جگہ دے گی۔ ایک لحاظ سے یہ علامتی فیصلہ ہو گا کہ اگرچہ وفاقی دارالحکومت میں ہندوﺅں کی تعداد دو سو سے زیادہ نہیں لیکن ان کے لئے بھی مندر کی

A Strange Story

ایک عجیب کہانی ۔ اوریجنل ٹائیٹل ۔ A strange story مصنف _ او ہنری مترجم - اسماء حسین آسٹین کے شمال میں ایک معزز خاندان رہتا تھا ۔ یہ خاندان جان اسمودرز ، اُس کی بیو ی اور پانچ سالہ بیٹی پر مشتمل تھا۔ ایک رات کھانے کے اُن کی بیٹی…

بھارت کی نو آبادیاتی طرزِ فکر

افتخار گیلانیبھارت کا رویہ برسوں سے اس خطے میں نوآبادیاتی طرز کا رہا ہے اور 2014ءمیں نریندر مودی کے برسراقتدار میں آنے کے بعد اس میں مزید شدت آگئی ہے۔افریقی ملک ماریشس سمیت جنوبی ایشیا کے دو اہم ممالک کے بڑے میڈیا ادارے

اُس سے گِلے شکایتیں شکوے بھی چھوڑ دو در اُس کا چُ…

اُس سے گِلے شکایتیں شکوے بھی چھوڑ دو در اُس کا چُھٹ گیا تو دریچے بھی چھوڑ دو کیسا ہے وہ کہاں ہے بنا کس کا ہم سفر بہتر ہے کچھ سوال ادھورے بھی چھوڑ دو اک بے وفا کا نام لکھو گے کہاں تلک اوراق اپنے ماضی کے سادے بھی چھوڑ دو…

قاضی فائز عیسیٰ کیس ۔۔نصرت جاوید

افتخار چودھری صاحب ایک طویل تنازعہ اور بحران کے بعد سپریم کورٹ کے چیف جسٹس کے منصب پر بحال ہوئے تو انہوں نے سیاست دانوں کی ’’صداقت‘‘ اور ’’دیانت‘‘ کو یقینی بنانے کے لئے ازخود نوٹسوں کی رونق لگانا شروع کردی۔’’جعلی ڈگریوں،حج سکینڈل‘‘…