ڈیلی آرکائیو

2020-07-08

بشکریہ https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/2277364719160715

روایت کی موت ۔۔انعام رانا

اسّی کی دہائی تھی اور گھر سُنیوں کا تھا۔ لیکن ابھی ضیائیت کے بچھائے بیج کی فصل پک کر تیار نہ ہوئی تھی۔ سو شاید آخری نسل پروان چڑھی جہاں اہل بیت اطہار سلام اللہ علیھم اجمعین کسی چونکہ اگرچہ چنانچہ کے بنا…

فضا کا ذرہ ذرہ عشق کی تصویر تھا کل شب جہاں میں تھا…

فضا کا ذرہ ذرہ عشق کی تصویر تھا کل شب جہاں میں تھا خاطر غزنوی فضا کا ذرہ ذرہ عشق کی تصویر تھا کل شب جہاں میں تھا میں خود اپنی نظر میں صاحب توقیر تھا کل شب جہاں میں تھا جسے دیکھا وہ دیوانہ تھا نقش دلنشیں کے حسن عادل کا جسے سوچا فنا کے رنگ…

پروفیسر حمید کوثر: ایک ولی صفت استاد(2)

حافظ شفیق الرحمنپروفیسر صاحب دیسی کھانوں کے شوقین تھے گجریلا، گاجر کا حلوہ، چھوٹے پائے،قورمہ، مٹن کڑاہی کھیر اور فرنی رغبت سے کھاتے۔کھیر اور فرنی تو خود بناتے۔ مٹھائیوں میں انہیں پتیسہ اور موتی چور کے لڈو پسند تھے۔ مہینے میں

افسانچہ : مساوات مصنف : فیودر سلوگب (روسی مصنف) …

افسانچہ : مساوات مصنف : فیودر سلوگب (روسی مصنف) مترجم : سعادت حسن منٹو ••••• ایک بڑی مچھلی نے ایک ننھی سی مچھلی کو پکڑ لیا اور اسے نگل جانا چاہا۔۔۔ ننھی مچھلی نے چلا کر کہا : " یہ سراسر بے انصافی ہے۔۔۔ میں تمہاری طرح زندہ رہنا چاہتی…