ڈیلی آرکائیو

2020-07-16

بندِ قبا سے متعلق اشعار ….. ہم بھی کچھ اپنے دل…

بندِ قبا سے متعلق اشعار ..... ہم بھی کچھ اپنے دل کی گرہ کھولنے کو ہیں کس کس کا آج دیکھیے بند قبا کھلے کلیم عاجز .......... جتنا ہوا سے بندِ قبا کھل گیا ترا ہم لوگ اس قدر بھی کسی سے کہاں کھلے محسن نقوی ............. ۔ " کھُلنے کے…

آئیے الحاد سے گفتگو کریں۔ (پہلا محاضرہ) – حسیب احمد حسیب

محاضرات الحاد کے حوالے سے ایک نیا سلسلہ شروع کیا جا رہا ہے یہ سلسلہ خاص الحاد کی محنت کرنے والوں کیلئے ہے اس سلسلے میں ہم یہ گفتگو کریں گے کہ وہ کون سا منہج اور طرق ہے کہ جس کو لے کر ہم الحاد سے ایک مفید گفتگو کر سکتے ہیں اور اس کے مطلوب…

مصر روم اور ایران سب کا عقیدہ تھا کہ انسان خود کو …

مصر روم اور ایران سب کا عقیدہ تھا کہ انسان خود کو قربان کرتے ہوئے اپنے ملک اور دنیا کو بچا سکتا ہے. چین میں جب بھی کوئی بڑی قدرتی آفت آتی تھی تو وہاں کے حاکم کو سزا دی جاتی تھی کیونکہ وہ خدا کا دنیاوی نمائندہ تصور کیا جاتا تھا. قدیم یونان…

پارٹی میں وزیراعظم کا متبادل کوئی نہیں۔۔محمد اظہارالحق

پچاس سال سے ہمیں بتایا جا رہا ہے کہ پیپلز پارٹی میں بھٹو خاندان کا کوئی متبادل نہیں! تیس برس سے یہ سکھایا جا رہا ہے کہ مسلم لیگ میں نواز شریف کا متبادل کوئی نہیں! اب ایک نیا سبق شروع ہوا ہے کہ تحریک انصاف…

کپاس کی فریاد | Khabrain Group Pakistan

چوہدری ریاض مسعودپاکستان کی کپاس اپنے ریشے کی لمبائی ،مضبوطی اور کوالٹی کی وجہ سے دنیا بھر میں بے حد پسند کی جاتی ہے، اس ”روپہلے ریشے“ کپاس سے تیار ہونیوالا دھاگہ ، کپڑ اور اسکی دیگر مصنوعات اسی وجہ سے عالمی منڈیوں میں نمایاں

وہ کاغذ کی کشتی وہ بارش کاپانی ……………. سن…

وہ کاغذ کی کشتی وہ بارش کاپانی ................ سندرشن فاخر یہ دولت بھی لے لو، یہ شہرت بھی لے لو بھلے چھین لو مجھ سے میری جوانی مگر مجھ کو لوٹا دو بچپن کا ساون وہ کاغذ کی کشتی وہ بارش کا پانی محلے کی سب سے پرانی نشانی وہ بڑھیا جسے بچے…

ہندی نظمشاعرہ: روپم مشرمترجم : آفتاب احمد …

ہندی نظمشاعرہ: روپم مشرمترجم : آفتاب احمد ---میں نے کہا تھا کبھی کسی جگہ نہ سنبھال پاؤں خود کو اور رو پڑوں تو مجھے گلے لگا لینا!اس وقت تمھاری سُرخ آنکھیں کچھ نم ہوگئی تھیںاور ہونٹوں پا جانے کیسے کچّا دودھ مہک اُٹھا…

آئینی اصلاحات کی ضرورت | Khabrain Group Pakistan

وزیر احمد جوگیزئیعوام بہت شدت سے منتظر تھے کہ کوئی لیڈر پاکستان کو لیڈ کرے گا اور پاکستان کی قسمت میں بھی جا گ اٹھے گی ،قوم کو ایک ایسا لیڈر ملے گا جو اس قوم کو عالمی سطح پر اس کے جا ئز مقام تک لے کر جا ئے گا ۔اور اسی لیے بہت