ڈیلی آرکائیو

2020-09-02

ڈر ہے کہ پھر مرا دلِ مُضطر حزیں نہ ہو اِس " …

ڈر ہے کہ پھر مرا دلِ مُضطر حزیں نہ ہو اِس " ہاں" سے بھی مراد تمہاری "نہیں" نہ ہو کیوں انتظارِ حشر ہو آپس کی بات پر؟ کیوں فیصلہ ہمارا تمہارا یہیں نہ ہو؟ ظالم نے سنگِ در کو بھی اُٹھوا دیا ہے آج اِس وہم سے کہ یہ بھی کسی…

ﻣُﺠﮭﮯ ﺩِﻝ ﮐﯽ ﺧﻄﺎ ﭘﺮ ﯾﺎﺱؔ ﺷﺮﻣﺎﻧﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺁﺗﺎ ﭘﺮﺍﯾﺎ…

ﻣُﺠﮭﮯ ﺩِﻝ ﮐﯽ ﺧﻄﺎ ﭘﺮ ﯾﺎﺱؔ ﺷﺮﻣﺎﻧﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺁﺗﺎ ﭘﺮﺍﯾﺎ ﺟﺮﻡ ﺍﭘﻨﮯ ﻧﺎﻡ ﻟِﮑﮭﻮﺍﻧﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺁﺗﺎ ﺑُﺮﺍ ﮨﻮ ﭘﺎﺋﮯ ﺳﺮﮐﺶ ﮐﺎ ﮐﮧ ﺗﮭﮏ ﺟﺎﻧﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺁﺗﺎ ﮐﺒﮭﯽ ﮔﻤﺮﺍﮦ ﮨﻮ ﮐﺮ ﺭﺍﮦ ﭘﺮ ﺁﻧﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺁﺗﺎ ﻣُﺠﮭﮯ ﺍﮮ ﻧﺎﺧﺪﺍ ﺁﺧﺮ ﮐِﺴﯽ ﮐﻮ ﻣﻨﮧ ﺩﮐﮭﺎﻧﺎ ﮨﮯ…

غم (اداسی) ذات کو گہرائی عطا کرتے ہیں، اور خوشی کی…

غم (اداسی) ذات کو گہرائی عطا کرتے ہیں، اور خوشی کی عطاء 'بلندی' ہے ۔ غم اگر جڑیں ہے تو خوشیاں اُس کی شاخیں ۔ خوشی اُس درخت کی مانند ہے جو اپنے پنجے آسمان کی چھاتی میں گاڑھے ہو تو غم کی مثل اُن جڑوں کی ہے جو زمین کے رحم میں پھلتی…

چراغ اپنی تھکن کی کوئی صفائی نہ دے وہ تیرگی ہ…

چراغ اپنی تھکن کی کوئی صفائی نہ دے وہ تیرگی ہے کہ اب خواب تک دکھائی نہ دے مسرتوں میں بھی جاگے گناہ کا احساس مرے وجود کو اتنی بھی پارسائی نہ دے بہت ستاتے ہیں رشتے جو ٹوٹ جاتے ہیں خدا کسی کو بھی توفیقِ آشنائی نہ…

اب نہیں تو کبھی نہیں ۔۔سید عارف مصطفیٰ

جلدی کیجیے کہیں دیر نہ ہو جائے۔۔بیشک اب وہ وقت آگیا ہے کہ کراچی کا فیصلہ فی الفورکردیا جائے ۔۔۔کیونکہ پہلے ہی بہت تاخیر ہوچکی ۔۔۔ اور اب انتہائی بڑے اقدامات کے سوا کوئی چارہ نہیں ۔۔۔ اگر اب بھی کراچی کو…

ایک فارسی شعر،اس کا ترجمہ اور اسی مفہوم کو ادا کرت…

ایک فارسی شعر،اس کا ترجمہ اور اسی مفہوم کو ادا کرتا ہوا اردو کا ایک شعر: ببین کرامتِ بت خانهٔ مرا ای شیخ که چون خراب شود خانهٔ خدا گردد ( چندر بھان برہمن) ترجمہ: اے شیخ ،مرے بت خانے کی کرامت دیکھ کہ جب وہ…

احمد راہی کا یومِ وفات Sep 02, 2002 آج اردو اور …

احمد راہی کا یومِ وفات Sep 02, 2002 آج اردو اور پنجابی کے نامور شاعر اور فلمی نغمہ نگار احمد راہی کی برسی ہے۔ ۔ 12 نومبر 1923ء اردو اور پنجابی کے نامور شاعر اور فلمی نغمہ نگار احمد راہی کی تاریخ پیدائش ہے۔احمد راہی کا اصل نام غلام احمد…

مساواتِ مرد و زن: قرآنی تصور – اصل میں دونوں ایک ہیں – ڈاکٹر غلام شبیر

زندگی عورت ومرد کی دوئی میں ایک (نامیاتی وحدت) کو دیکھنے کا تماشا ہے (اقبال)ابن رشد کا بیان ہے کہ عورت اور مرد میں فرق ہیئت اور نوعیت کا نہیں کمیت کاہے۔ صلاحیتوں میں سماجی حالات کے پیش نظر کمی بیشی ہے کیمسٹری دونوں کی ایک ہے۔ افلاطون کی…