ڈیلی آرکائیو

2021-05-06

آج – 06؍مئی 2021 اردو کے بلند پایہ ناقد، ادیب، ڈر…

آج - 06؍مئی 2021 اردو کے بلند پایہ ناقد، ادیب، ڈرامہ نگار اور شاعر ”#پروفیسر_شمیم_حنفی صاحب“ آج ملک عدم کو روانہ ھو گئے۔ إِنَّا لِلّهِ وَإِنَّـا إِلَيْهِ رَاجِعونَ #پروفیسر_شمیم_حَنفی 17؍مئی 1939ء کو سلطانپور میں پیدا ہوئے۔ وہ مشہور…

https://www.facebook.com/785687874915589/posts/1844709159013450/ بشکریہ https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/2992274921003021

( غیر مطبوعہ ) یعنی ۔۔ اِس امر کا اعلان نہیں بھی …

( غیر مطبوعہ ) یعنی ۔۔ اِس امر کا اعلان نہیں بھی ہوتا عشق ہوتا بھی ہے آسان نہیں بھی ہوتا اس سے بے خوف نہ مِلیے کہ بتا دیتا ہوں کبھی انسان میں انسان نہیں بھی ہوتا میں نے سامان جو مانگا تو مَحبت نے کہا اِس سفر میں سر و سامان نہیں بھی…

( غیر مطبوعہ ) بس اک پِیرایۂ اظہار میں الجھا ہوا…

( غیر مطبوعہ ) بس اک پِیرایۂ اظہار میں الجھا ہوا ہوں اسے مِل کر بھی تو افکار میں الجھا ہوا ہوں مرے باہر کے دشمن تُو ابھی تو مطمئن رہ میں اپنے آپ سے پیکار میں الجھا ہوا ہوں ترے رستوں کے پیچ وخم کا ہے ادراک مجھ کو زمانے بس تری رفتار میں…

جب میری یاد۔۔!! جب میری مدھم پڑتی یاد آدھی رات ک…

جب میری یاد۔۔!! جب میری مدھم پڑتی یاد آدھی رات کے بعد چلنے والی ٹراموں کی طرح صرف بڑے اسٹیشنوں پر رُکنے لگے گئی میں تمہیں بھولوں گا نہیں۔۔۔ میں یاد کروں گا تمہاری آنکھوں کی خاموشی اور کبھی ختم نہ ہونی والی شام کو... More بشکریہ…

بہار کا روپ بھی نگاہوں میں اک فریبِ بہار سا ہے ح…

بہار کا روپ بھی نگاہوں میں اک فریبِ بہار سا ہے حیات میں دلکشی نہیں ہے حیات میں انتشار سا ہے زمانہ کیا دیکھیے دکھائے نہ جانے کیا انقلاب آئے فلک کے تیور میں خشمگیں سے زمیں کے دل میں غبار سا ہے کمالِ دیوانگی تو جب ہے رہے نہ احساسِ جیب و…

کھڑکی کے اس پار۔۔نعیم فاطمہ علوی

کرفیو کا عالم ہے ۔۔سڑک پریا تو مانگنے والے نظر آتے ہیں یا پھر گاڑیوں میں لوگ انجانی منزلوں پر بھاگتے دوڑتے نظر آتے ہیں۔میں نے علوی صاحب سے کہا چلیں ہوا خوری کے لیے باہر نکلتے ہیں۔۔اپنے علاقے سے باہر G-13کی طرف گئے تو ایک جگہ لوگوں کا…

دل کی دل نے نہ کہی، یوں تو کئی بار ملے ہم شناسا ت…

دل کی دل نے نہ کہی، یوں تو کئی بار ملے ہم شناسا تھے مگر، صورتِ اغیار ملے اس سے کہنا کہ نہ اب اور وہ اِترا کے چلے دوستو!! تم کو اگر یارِ طرحدار ملے بے وفا ہم ہیں تو اے جانِ وفا یونہی سہی ڈھونڈ لینا جو تمہیں کوئی وفادار ملے ہم تو دل…

انسان کبھی ہجوم کی عام روش سے الگ چلنے پر اس قدر ا…

انسان کبھی ہجوم کی عام روش سے الگ چلنے پر اس قدر آمادہ نہ تھا جتنا کہ آج ہے۔ وہ سوچ اور روش جس نے انسانیت کو بے حد و حساب دکھ اور مصائب میں جکڑے رکھا۔ ایک نیا شعور جنم لے رہا ہے۔ ہم بہت کچھ سہہ چکے۔ موجودہ لمحے بھی آپ کا اور میراذہن…